کوئی بھی نئی تکلیف مثلاً بخار، نزلہ، زکام، کھانسی، درد، ڈر، خوف، بے چینی، پیٹ کی خرابی، اسہال، پیچش، دانت، کان، ناک اور گلے کی خرابی وغیرہ جو اچانک اور شدت کے ساتھ ظاہر ہوئی ہو؛ اُس کا علاج ہومیوپیتھک دوائی ایکونائٹ (Aconite 30) سے شروع کیا جائے تو بالعموم پہلی ہی خوراک سے ہی فوراً بہتری ہو جاتی ہے۔

“اچانک” اور “شدت” کا وقت گزر جائے تو پھر اس کا استعمال کوئی خاص فائدہ نہیں دیا کرتا۔

اکونائٹ 30 گھر میں موجود ہو تو بہت سارے مسائل، خرچ اور پریشانی سے بچا جا سکتا ہے۔

حسین قیصرانی ۔ سائیکوتھراپسٹ & ہومیوپیتھک کنسلٹنٹ ۔ لاہور پاکستان فون نمبر 03002000210۔