3 01, 2021

انگزائٹی، ڈپریشن، معدے اور پیشاب کے مسائل – کامیاب کیس، دوا اور علاج -حسین قیصرانی

By |2021-01-23T15:11:29+05:00January 3, 2021|Categories: Digestive System, Homeopathy in Urdu, Mental Health|0 Comments

مسٹر ایچ کا تعلق اسلام آباد سے ہے۔ وہ ایک سافٹ ویئر انجینئر ہیں۔ ان کے عجیب و غریب مسائل نے ان کے معیار زندگی کو خاصہ متاثر کر رکھا تھا۔ گھر سے نکلتے ہی پیشاب اور پاخانے کی حاجت کا بار بار محسوس ہونا اور ان پر کنٹرول کھو دینے کے خوف نے زندگی کو محدود کر دیا تھا۔ دنیا گھومنے کا شوق تھا لیکن سفر کے دوران ہونے والی انزائٹی (Anxiety) کی وجہ سے یہ ممکن نہ تھا۔ لوگوں سے میل جول نہ ہونے کے برابر تھا۔ رش والی جگہ پر دم گھٹنے لگتا تھا۔ اسے لگتا تھا وہ وہاں پھنس جائے گا اور نکل نہیں پائے گا۔ معدے کے مسائل، آنکھوں میں سوجن، بے سکون نیند، ہر وقت ڈپریشن، ذہنی دباؤ، پٹھوں کی شدید کمزوری، خود اعتمادی کا فقدان، وہم، ڈر، خوف، پریشانی اور گھبراہٹ نے شخصیت کو مسخ کر رکھا تھا۔ تفصیلی گفتگو کے بعد جو مسائل سامنے آئے ان کا خلاصہ یہ ہے۔ ۔🔷 جسمانی مسائل🔷۔ سفر کے دوران بلکہ سفر کا پروگرام بنتے ہی شدید ٹینشن ہوتی تھی۔ ذہن ہر وقت اس معاملے پر سوچنے پر مجبور ہی ہوتا۔ بار بار پیشاب کی حاجت ہوتی (strong   urge   for    urination) اور ایسا لگتا جیسے لوز موشن () کی شکایت [...]

16 12, 2020

آٹزم سپیکٹرم ڈس آرڈر کیا، کیوں، کیسے ۔ دوا علاج کے معاملات – حسین قیصرانی

By |2021-01-25T13:50:34+05:00December 16, 2020|Categories: Autism ASD ADHD, Children's Diseases, Homeopathy in Urdu, Mental Health|0 Comments

آٹزم کیا ہے، کیوں ہوتا ہے اور علاج کی تفصیل - مکمل راہنمائی حسین قیصرانی سائیکوتھراپیسٹ & ہومیوپیتھک کنسلٹنٹ ENGLISH VERSION:(ASD) ۔ Autism Spectrum Disorder آٹزم ایک ایسا ذہنی عارضہ ہے جس میں مریض کو بات چیت، میل جول، سوچ سمجھ اور اپنے حواس کو کنٹرول کرنے میں مشکلات پیش آتی ہیں۔ آٹزم سے متاثرہ مریض کا دماغ  عام انسان کے مقابلے میں ایک مختلف طریقے پر نشوونما پاتا اور کام کرتا ہے۔ یہ دنیا کو مختلف انداز سے دیکھتے اور سمجھتے ہیں۔ آٹزم کا شکار ہر بچہ دوسرے سے مختلف ہوتا ہے اور اس کی علامات بھی دوسرے آٹزم بچوں سے مختلف ہوتی ہیں۔ یہ بچے یا تو ہر پل تبدیلی چاہتے ہیں یا پھر یکسانیت کو پسند کرتے ہیں اور نئے ماحول یا ہر صورتِ حال کے مطابق ڈھلنا ان کے لیے مشکل ہوتا ہے۔ دیر سے بولنا شروع کرتے ہیں اور اپنی بات سمجھا نہیں پاتے۔ عام طور پر یہ  بچے دوسروں سے نظریں نہیں (poor eye contact) ملاتے۔ ان کا نام پکارا جائے تو متوجہ نہیں ہوتے اگرچہ وہ  اپنا نام سن رہے ہوتے ہیں۔ یہ پسند نہیں کرتے کہ کوئی ان کے زیادہ قریب آئے اور ان کو چھوئے (don’t liked to be touch)۔ یہ [...]

13 12, 2020

خود اعتمادی قوت فیصلہ کمی، وسوسے، ڈر – کامیاب کیس، علاج دوا – حسین قیصرانی

By |2021-01-20T15:02:32+05:00December 13, 2020|Categories: Homeopathy in Urdu, Mental Health, SOLVED CASES|0 Comments

27 سالہ مسز K نے حیدرآباد سے کال کی۔ محترمہ بہت پریشان تھیں اور شدید ڈپریشن (depression) کا شکار تھیں۔ ان کے لیے بات کرنا اور اپنی طبیعت کے بارے بتانا بھی مشکل تھا۔ ذہنی انتشار بہت شدت اختیار کر چکا تھا۔ شدید گھٹے ہوئے جذبات، شادی شدہ زندگی کی ناہمواری، بے پناہ ذہنی الجھاؤ، نیند کی کمی، بھوک، پیاس کی عدم موجودگی، احساس کمتری، غصہ، انگزائٹی اور بہت سے مسائل نے شخصیت کو بہت ڈسٹرب کر رکھا تھا۔ تفصیلی گفتگو سے درج ذیل صورت حال سامنے آئی۔ 1۔ مسز K   اپنے جذبات کا کبھی بھی اظہار (introvert) نہیں کر پاتی تھی۔ خوشی، غمی، محبت،  نفرت یا غصہ غرض ہر جذبہ دبا ہوا تھا۔ کسی سے بات کرنا بہت مشکل لگتا تھا۔ بات کرنے کی ہمت ہی نہیں ہوتی تھی۔ زیادہ تر خاموش رہتی تھی۔ شرمیلا پن ( extremely          shy) بہت زیادہ تھا۔ اگر کسی چیز کی ضرورت ہوتی تو اپنے گھر والوں سے بھی نہ کہتی تھی۔ 2۔ غصہ (anger) بہت شدید آتا تھا لیکن کبھی کسی پر غصہ نکالتی نہیں تھی۔ اندر ہی اندر گھٹتی رہتی تھی۔ شدید جھنجھلاہٹ ہونے لگتی تھی۔ انگزائٹی (Anxiety)  بہت بڑھ جاتی تھی۔دل کرتا  تھا کہ چیزیں توڑ دوں [...]

12 12, 2020

خود اعتمادی، قوت فیصلہ کی کمی، ذہنی کشمکش، سوچیں، ڈر – کامیاب علاج – فیڈبیک

By |2021-01-25T12:17:18+05:00December 12, 2020|Categories: Homeopathy in Urdu, Mental Health, Testimonials|0 Comments

میرے لیے بات کرنا شروع سے ہی مشکل تھا۔ گھر میں سب کانفیڈنٹ تھے لیکن میرے اندر سیلف کانفیڈینس (Lack of Confidence) بالکل نہیں تھا۔ جھجھک ہر معاملے میں نمایاں تھی۔ مجھے لگتا تھا سب مجھ سے بہتر ہیں اور میں سب سے کمتر (Inferiority Complex) ہوں۔ میں خود کو پڑھائی یا کسی بھی ایکٹویٹی میں مصروف رکھتی تھی۔ سکول لائف میں ہی سلائی، کڑھائی، کوکنگ اور پینٹنگ سیکھی۔ شائد میں یہ سب اس لیے کرتی تھی کہ سب میری تعریف کریں۔ لیکن سب سے مشکل بات کرنا تھا۔ میں بھوک سے نڈھال ہو جاتی لیکن امی سے کھانا نہیں مانگ سکتی تھی۔ اگر کبھی کوئی کچھ پوچھ لیتا تو زبان لڑکھڑا جاتی تھی، ٹانگیں کانپنے لگتی تھیں اور میں کھڑی نہیں رہ پاتی تھی۔ میں اکیلی باہر نہیں جا سکتی تھی۔ لوگوں سے ڈر لگتا تھا۔ اگر کسی معاملے میں میری حق تلفی ہوتی تو میں خاموشی سے سہہ لیتی اور اپنے آپ کو ہی قصوروار سمجھنے لگتی تھی۔ ہر وقت رونا آتا رہتا تھا۔ بھوک پیاس نہیں لگتی تھی۔ جب کافی دیر گزر جاتی تو خود ہی پانی پی لیتی لیکن پیاس کا احساس نہیں ہوتا تھا۔ مجھے زندگی میں کوئی چارم نظر نہیں آتا تھا۔ میری [...]

5 12, 2020

Totality of symptoms

By |2020-12-07T23:48:06+05:00December 5, 2020|Categories: Homeopathic Awareness, Homeopathy in Urdu, Professional|0 Comments

ڈاکٹر بنارس خان اعوان، واہ کینٹ۔۔۔۔ ایسی علامات جو کسی منزل کی طرف اشارہ نہ کرتی ہوں، بے کارہیں۔ آپ نے غور کرنا ہے کہ جو علامات آپ نے اکٹھی کیں، ان کا مقصد کیا ہے؟ وہ مریض کو کیسے اور کیوں تنگ کرتی ہیں؟مریض کیسے اُن سے عہدہ برا ہوتا ہے؟ مریض کی زندگی میں کیا بنیادی تبدیلیاں لا چکی ہیں؟ اگر آپ کے پاس ان سوالوں کے جواب ہیں تو آپ کی کامیابی کے امکانات قوی ہیں۔ ہمارے ہاں ایک اصطلاح استعمال ہوتی ہے Totality   of    symptoms دراصل اس سے مراد Essential   totality    of    symptoms ہے۔ جب ہم کیس لیتے ہیں تو مریض سے بے شمار علامات حاصل ہوتی ہیں اور وہ ہم نوٹ کرتے ہیں لیکن سب کی سب کام کی نہیں ہوتیں۔ کہا جاتا ہے گاندھی کو ایک بار کسی نے خط لکھا اور بہت کچھ برا بھلا کہا اور گالیاں لکھیں۔ خط چار صفحات پر مشتمل تھا اور پیپر پن سے صفحات کو جوڑا گیا تھا۔ گاندھی نے اپنے سیکریٹری سے سارا خط سنانے کو کہا اور تحمل سے سارا خط سنا۔ سننے کے بعد سیکریٹری کو بولا۔ اس میں سے کام کی چیز (پیپر پن) نکال لو باقی ضائع کردو۔ ایک [...]

5 12, 2020

منہ کا ذائقہ

By |2020-12-05T17:47:07+05:00December 5, 2020|Categories: Homeopathic Awareness, Homeopathy in Urdu, Mental Health|0 Comments

ڈاکٹر بنارس خان اعوان، واہ کینٹ آج صبح ایک خاتون آئی۔ غیر شادی شدہ۔ منہ کا ذائقہ خراب،عجیب سا ہے۔ جیسے کسی جلی ہوئی شے کا ہو۔ لیکن میں اپ کو مزید واضح نہیں سکتی کہ کیسا ہے۔ اور ایک ہفتہ سے ایسا ہو رہا ہے۔ میں نے باقی جو بھی سوالات کیے اس نے خاطر خواہ جواب نہیں دیا۔ مطلب مجھے کوئی رہنما علامت نہیں ملی۔ ہر بات میں اس کا جواب، نہیں اور کچھ نہیں۔ اللہ کا شکر ہے۔ بس بھوک کم لگتی ہے۔ پیاس نارمل۔ ہاضمہ، نیند،غذا کی پسند ناپسند، پسینہ۔ حیض نارمل۔ کوئی غذا کوئی مسئلہ پیدا نہیں کرتی۔ کوئی کمی بیشی نہیں۔ بس آپ مجھے منہ کا ذائقہ ٹھیک کرنے کی دوا دیں۔ اس کی ساتھ والی نے کہا، بتاؤ نہ پیاس بھی کم ہے۔ میں نے دیکھا میرے ہر مزید سوال پر اس کے چہرے پر ناپسندیدگی اۤتی جا رہی تھی۔ غذا کے حوالے سے اس کے ساتھ اۤئی ہوئی خاتون نے کہا یہ نمک ذرا زیادہ ڈالتی ہے۔ میں دوا دینے سے پہلے تین سوالات مزید کیے۔ کیا آپ کے چہرے کی جلد چکنی ہے؟ جواب:  ہاں اپنی باتیں دوسروں سے شئیر کرتی ہیں؟ نہیں غصے کی حالت میں اگر کوئی دم دلاسہ [...]

5 12, 2020

خوف اور میازم

By |2020-12-05T17:18:20+05:00December 5, 2020|Categories: Homeopathic Awareness, Homeopathy in Urdu, Mental Health|0 Comments

ڈاکٹر بنارس خان اعوان 03015533966 خوف کی حالت غیر فطری ہوتی ہے یہ زیادہ دیر قائم نہیں رہ سکتی۔ بچوں میں خوف سورا کی بہترین مثال ہے۔آپ نے دیکھا ہو گا کے بچوں کی خوف سے چیخ نکل جاتی ہے، بعض بچوں کا پیشاب خطا ہو جاتاہے اور خوف ان کے چہروں سے بخوبی عیاں ہوتا ہے۔رنگ زرد پڑ جاتا ہے۔ اور وہ تھر تھر کانپ رہے ہوتے ہیں۔یا جیسے کسی لڑکی کا پاؤں چھپکلی پر آ جائے ڈر کے مارے اس کا جو حال ہو گا وہ سورا میازم کا خوف ہو گا۔ لیکن ایک انسان جب حالتِ خوف میں اپنے خوف پر قابو پانے کی جدو جہد کرتا ہے۔ مثلاً گھر میں چور ڈاکو گھس آنے پر پولیس یا پڑوسیوں کو فون کرتا ہے۔دروازوں کو کنڈی لگاتا ہے یا مال و جان جان بچانے کے دیگر اقدامات کرتا ہے تو اس کا یہ خوف سائیکوسس کے ضمن میں گنا جائے گا۔ایسا شخص جو خوف زدہ رہنے کے باوجود کہے میں ڈرتا ورتا کسی سے نہیں ہوں (سابق صدر پرویز مشرف اکثر یہ جملہ کہا کرتے تھے) سائیکوسس کی مثال ہے۔ لیکن خوف جب حد سے بڑھ جائے تو سفلس میازم میں چلا جاتا ہے۔ ہمار ے گاؤں میں [...]

15 11, 2020

صحت و سلامتی کی طرف واپسی – الحمد للہ – حسین قیصرانی

By |2020-11-15T13:00:31+05:00November 15, 2020|Categories: Homeopathic Awareness, Homeopathy in Urdu, Respiratory|0 Comments

اکتوبر کا مہینہ تعلیمی سرگرمیوں اور کچھ سیر و تفریح کی وجہ سے مسلسل سفر میں گزرا۔ اس دوران میں بے شمار لوگوں سے ملنا ملانا بھی رہا۔ سخت سردی بلکہ برف باری میں وقت گزرا تو کہیں پسینہ سے شرابور کیفیت سے دوچار رہے۔ کہیں کرونا کے اثرات کی گونج رہی تو کہیں جیسے اس کی کچھ خبر ہی نہیں تھی۔ اس بھاگ دوڑ، میل ملاپ اور دعوتوں خدمتوں میں کچھ ایسا ہوا کہ جو عام نزلہ زکام، کھانسی، گلا خرابی، مسلسل چھینکوں، سردی وغیرہ سے زیادہ اور مختلف تھا۔ خود کو الگ تھلگ کرنے تک گھر کے افراد میں بھی ایسی ہی کیفیات نمودار ہونا شروع ہو گئیں۔ اللہ کا کرم ہوا کہ علاج کے دو تین دن بعد ہی سے دوسرے افراد نارمل ہو گئے۔ اپنے آپ کو علیحدہ کر لیا ہوا تھا۔ پروردگار کے کرم، فیملی کی خوب خاطرداری اور اپنے علاج سے اگرچہ صورتِ حال مکمل کنٹرول ہو گئی تاہم اپنا علاج میرے اپنے لئے کوئی خاص مفید نہ ہو پا رہا تھا۔ میرا خیال تھا کہ یہ ایسے ہی چلے گا اور ہفتہ دس دن بعد ہی واضح بہتری کا امکان ہو سکے گا۔ اس دوران ڈاکٹر بشرہ خان صاحبہ نے کسی حوالہ سے [...]

20 09, 2020

Aloe socotrina – Homeopathic Remedy – Materia Medica Viva George Vithoulkas

By |2020-09-22T11:31:37+05:00September 20, 2020|Categories: George Vithoulkas, Materia Medica, Professional|0 Comments

Aloe vera, Barbadensis vel Socotrina, Aloe Soccotrina N.O. Liliaceae Family: Jussieu [vegetable substance] - Hexandria monogynia, L. Mode of preparation: A tincture is made from the fiery red gum of the plant by trituration.   The essential features This is a remedy that primarily affects the digestive system and more especially the end of the large intestines. Its tendency is to produce an engouement of the veins causing fullness throughout the body, but more especially in the liver region, an abdominal, rectal and intestinal fullness. The main pathology in which you will find Aloe to be indicated is spastic or ulcerative colitis. I have found, however, that the great characteristic of this remedy is a preoccupation that the patient has with his pathology, that is to say with the whole cycle - eating to excreting. Aloe is easily disturbed by the intake of food, its digestion and its expulsion. If you should have such a case, and treat it for a long time before recognising it, you will find that the patient takes on a hypochondriacal attitude towards his "stool" and the disturbances that accompany it. The patient may complain constantly about being unable to have a normal stool, and [...]

17 09, 2020

مسائل اور اُن کا حل

By |2020-09-17T00:48:55+05:00September 17, 2020|Categories: About, Homeopathic Awareness, Homeopathy in Urdu, Mental Health|0 Comments

بھوک، پیاس، پیٹ خرابی، معدے کے مسائل میگرین، سر درد، اعصابی درد قبض، بواسیر، فسچلا، فشرز شدید غصہ، غم، کڑھنے رونے کا مزاج بچوں کے مسائل، بدمزاجی، بار بار بیمار ہونا نزلہ، زکام، بخار، چھینکیں اور الرجی شیاٹیکا، کمر اور جوڑوں کے درد محبت میں ناکامی کا دکھ، دھوکا اور غم منفی سوچیں، وسوسے، وہم، الجھن، کنفوژن، کشمکش، بھولنے کی بیماری نیند کے مسائل، ڈراونے خواب، صبح تھکا ہارا  اور آوازار اُٹھنا  خدا نخواستہ اگر ایسے کسی مسئلہ نے آپ کو تنگ کر رکھا ہے اور عام دوائیوں سے حل نہیں نکل رہا تو آپ کو کسی ماہر اور تجربہ کار کلاسیکل ہومیوپیتھک ڈاکٹر سے اپنا کیس ڈسکس کرنا چاہئے۔ ہومیوپیتھی میں تین ہزار (3000) سے زائد ادویات موجود ہیں۔ اِس لئے بہت زیادہ امکان ہے کہ آپ کا مسئلہ ہمیشہ کے لئے حل ہو جائے۔ حسین قیصرانی – سائیکوتھراپسٹ & ہومیوپیتھک کنسلٹنٹ، لاہور پاکستان ۔  فون 03002000210